ماہرین زراعت نے کہاہے کہ جدیدٹیکنالوجی سے استفادہ کرکے آم کی 10ٹن فی ہیکٹرپیداوارکو 25ٹن فی ہیکٹرتک بڑھایاجاسکتاہے تاہم اس کے لئے ضروری ہے کہ باغبان ماہرین زراعت کی مشاورت سے پیداواری ٹیکنالوجی پر عملدرآمد یقینی بنائیں جس پودے پر 0.01فیصدپھل ہواسے نارمل جبکہ 0.02فیصد پھل کو اچھی فصل اور 0.03فیصد پھل والی فصل کو بمپرکراپ کہاجاتاہے۔

انہو ں نے بتایا کہ رواں ماہ جون کے دوران پھل کی تیزی سے نشوونما ہوتی ہے مگر درجہ حرارت میں غیر معمولی حد تک اضافہ‘ پانی کی کمی‘ تیزآندھیاں چلنے اورمختلف بیماریوں سمیت تیلے کے حملے سے پھل گرنا شروع ہوجاتا ہے

By admin

Leave a Reply

Your email address will not be published.