December 3, 2021

کھادوں کی ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد قوم کے مجرم ہیں ،چیف سیکرٹری پنجاب

لاہور پنجاب حکومت نے کھادوں کی  ذخیرہ اندوزی   کرنے اور نا جائز منافع   خوروں کیخلاف کریک ڈاون کا فیصلہ کیا ہے اور اس سلسلے میں تمام ڈویژنل کمشنرز کو ہدایات جاری کر دی ہیں۔چیف سیکرٹری پنجاب کامران علی افضل نے یہ ہدایات سول سیکرٹریٹ میں منعقد ویڈیو لنک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کیں۔

زراعت،صنعت اور خوراک کے محکموں کے ایڈمنسٹریٹو سیکرٹریز نے اجلاس میں شرکت کی جبکہ تمام ڈویژنل کمشنرز وڈیو لنک کے ذریعے شریک ہوئے۔ چیف سیکرٹری نے کہا کہ کسی کو بھی کسانوں کا استحصال کرنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی، کھادوں کی مصنوعی قلت پیدا کر کے نا جائز منافع کمانے والوں سے سختی سے نمٹا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ کھادوں کی ذخیرہ اندوزی میں ملوث افراد پوری قوم کے مجرم ہیں اور کسی رعائیت  کے مستحق نہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کسانوں کے مفاد کا ہر صورت تحفظ کریگی۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت یوریا کھاد وافر مقدار میں موجود ہے لیکن ڈیلر ز اسے گوداموں  میں ذخیرہ کرکے مصنوعی قلت پیدا کر رہے ہیں جس کے  خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا۔ چیف سیکرٹری نے ہدایت کی کہ کریک ڈاون چینی کی ذخیرہ اندوزی کیخلاف انتظامی اقدامات کی طرز پرشروع کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ، پولیس اور محکمہ زراعت کی ٹیمیں کھادوں کے گوداموں کی چیکنگ کریں اور ڈیلرز سے روزانہ کی بنیاد پر سٹاک کی پوزیشن حاصل کی جائے۔

انہوں نے کہا کہ ذخیرہ اندوزی اور ناجائز منافع خوری میں ملوث افراد کیخلاف قانون کے مطابق سخت کارروائی کی جائے اوربرآمد شدہ سٹاک مارکیٹ میں مقررہ قیمت پر فروخت کر دیاجائے۔ چیف سیکرٹری نے کھادوں کی ذخیرہ اندوزی بارے انتظامیہ کو معلومات فراہم کرنے کیلئے سپیشل برانچ کوفرائض تفویض کرنے سے متعلق بھی ہدایات جاری کیں۔